کورونا وائرس کے خلاف ایک ایسی موثر ویکسین تیار کر لی گئی ہے جس کے ابتدائی تجرباتی نتائج سے ظاہر ہوا ہے کہ وہ نوے فیصد لوگوں کو کووڈ کی لپیٹ میں آنے سے بچا سکتی ہے۔ادویات ساز بین الاقوامی کمپنیوں فائزر اور بائوٹیک جنھوں نے یہ ویکسین مشترکہ طور پر تیار کی ہے ان کا کہنا ہے کہ ‘یہ انسانیت اور سائنس کے لیے ایک بہت بڑا دن ہے۔’اس ویکسین کو تجرباتی سطح پر چھ ملکوں میں 43500 لوگوں کو لگایا گیا اور اس کے بارے میں اب تک کوئی خدشہ یا کوئی شکایت سامنے نہیں آئی ہے۔ان کمپنیوں کا ارادہ ہے کہ وہ اس ویکسین کی منظوری ہنگامی بنیادوں پر حاصل کریں تاکہ اس ماہ کے آخری تک اس کا استعمال شروع کیا جا سکے۔دنیا بھر میں عام لوگوں کی زندگیوں پر اس بیماری کی وجہ سے لگائی گئی پابندیوں سے بہتر علاج اور اس ویکسین کے استعمال سے چھٹکارا پایا جا سکتا ہے۔ایک درجن سے زیادہ ویکسینوں پر کام ہو رہا ہے جو کہ تجربات کے تیسرے اور آخری مرحلے میں ہیں لیکن یہ پہلی ویکسین ہے جس کے نتائج سامنے آئے ہیں۔

جواب ڇڏي وڃو

توهان جو برق‌ٽپال پتو شايع نہ ڪيو ويندو. گھربل شعبا مارڪ ڪيل آهن *