کراچی ایٹمی بجلی گھر کے ٹو نیشنل گرڈ سے منسلک ہوگیا جس سے قومی گرڈ کو 1100 میگا واٹ کی ماحول دوست، با کفایت اور قابل بھروسہ بجلی دستیاب ہوگی۔

پاکستان ایٹمی توانائی کمیشن نے یوم پاکستان کے موقع پر قوم کو خوشخبری دیتے ہوئے اعلان کیا ہے کہ کراچی میں ایٹمی بجلی گھر کینپ ٹو نیشنل گرڈ سے منسلک کردیا گیا ہے، اس سے قومی گرڈ کو 1100 میگا واٹ کی ماحول دوست ، با کفایت اور قابل بھروسہ بجلی دستیاب ہوگی۔

رواں سال فروری میں ابتدائی جانچ کے بعد پاور پلانٹ پر حفاظتی ٹیسٹنگ اور جانچ پڑتال کے نئے مرحلے کا آغاز کیا گیا تھا اور اس سے قبل دسمبر میں پاکستان نیو کلیئر ریگولیٹری اتھارٹی سے اجازت نامے کے بعد پاور پلانٹ میں ایٹمی ایندھن کی تنصیب کا کام بھی کیا گیا تھا۔

ترجمان کے مطابق اس سے قبل پاکستان ایٹمی توانائی کمیشن کے زیر انتظام پانچ ایٹمی بجلی گھر چل رہے ہیں جن میں سے کراچی میں کینپ اور دیگر چار پلانٹ چشمہ کے مقام پر واقع ہیں،2-K   پاور پلانٹ مئی میں باقاعدہ کمرشل آپریشن کا آغاز کردے گا۔

1100 میگا واٹ کی پیداواری صلاحیت کا ایک اور K-3  ایٹمی بجلی گھر 2021 کے آخر میں نیشنل گرڈ سے منسلک ہو جائے گا۔

جواب ڇڏي وڃو

توهان جو برق‌ٽپال پتو شايع نہ ڪيو ويندو. گھربل شعبا مارڪ ڪيل آهن *